27

بھارت میں کورونا وبا؛شتروگھن سنہا بھی مودی سرکار کیخلاف پھٹ پڑے

لوگوں کو اسپتالوں میں لاپرواہی اور بد انتظامی برداشت کرنا پڑ رہی ہے، شتروگھن سنہا فوٹو: فائل

لوگوں کو اسپتالوں میں لاپرواہی اور بد انتظامی برداشت کرنا پڑ رہی ہے، شتروگھن سنہا فوٹو: فائل

 ممبئی: بھارتی اداکار شتروگھن سنہا نے کورونا کی دوسری لہر کے دوران مودی سرکار کی کارکرگی کا پول کھول دیا ہے۔

بھارت میں کورونا وبا کی دوسری لہر نے ہر جانب لاشوں کے ڈھیر لگادیئے ہیں، دنیا کی سب سے بڑی جمہوریت سمجھنے والا ملک اب دنیا میں کورونا سے سب سے زیادہ متاثرہ ملک بن چکا ہے، بھارت بھر میں صحت کا نظام مکمل طور ہپر بیٹھ گیا ہے جب کہ مودی سرکار بلند و بانگ دعوؤں سے باز ہی نہیں آرہی۔ ایسی صورت حال میں بھارت کی سراقتدار جماعت بی جے پی ہی کے سابق مرکزی رہنما اور لیجنٖڈ بالی ووڈ اداکار شترو گھن سنہا بھی مودی سرکار پر پھٹ پڑے ہیں۔

اپنی ٹوئٹ میں شترو گھن سنہا نے کہا کہ بھارتی اسپتالوں میں طبی سہولیات کا فقدان ہے اور ہم اپنے عزیزوں اور پیاروں کو کھو رہے ہیں۔ کچھ روز قبل ہی نوجوان اداکار اور یو ٹیوبر راہل وہرا کی بہت کم عمر موت ہوگئی۔ اس کی آخری وڈیو نے تو دل کو تڑپا کر رکھ دیا کیونکہ اس نے بتایا تھا کہ اگر اسے بروقت اور مناسب علاج مل جاتا تو وہ بچ سکتا تھا۔ لوگوں کو اسپتالوں میں لاپرواہی اور بد انتظامی برداشت کرنا پڑ رہی ہے اور یہ زمینی حقیقت بہت خوفناک اور دل دہلا دینے والی ہے کیونکہ مریضوں کا دعوی ہے کہ ان کے لیے اسپتالوں میں کچھ نہیں کیا جارہا۔

شترو گھن سنہا نے معروف ٹی وی اینکر کی ایک وڈیو شیئر کرتے ہوئے مزید لکھا ہے کہ ایک طویل انتظار کے بعد بالاآخر معروف اینکر روش کمار نے اپنے پروگرام میں اسپتالوں کا پردہ چاک کیا ہے اور تلخ حقائق سے بھر انکشافات سامنے لائے ہیں۔

واضح رہے کہ شترو گھن سنہا کئی برس بی جے پی کا حصہ رہے ، انہوں نے مودی سرکار کے علاوہ بی جی پی کی ہر حکومت میں مختلف وزارتوں پر ذمہ داریاں نبھائیں تاہم نریندرا مودی سے اختلافات کے بعد انہوں نے بی جے پی سے کنارہ کشی اختیار کرلی ہے۔

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں