15

حماس نے سیز فائر کی خلاف ورزی کی تو زیادہ طاقت سے حملہ کریں گے، اسرائیل

نیتن یاہو امریکی وزیر خارجہ کے ہمراہ مشترکہ پریس کانفرنس کر رہے تھے، فوٹو: اے ایف پی

نیتن یاہو امریکی وزیر خارجہ کے ہمراہ مشترکہ پریس کانفرنس کر رہے تھے، فوٹو: اے ایف پی

تل ابيب: اسرائیلی وزیراعظم نیتن یاہو نے دھمکی دی ہے کہ اگر حماس نے سیز فائر کی خلاف ورزی کی تو پہلے کے مقابلے میں زیادہ طاقت سے حملہ کریں گے۔

عالمی خبر رساں ادارے کے مطابق اسرائیلی وزیراعظم نیتن یاہو نے امریکی وزیر خارجہ انتھونی بلنکن کے ساتھ مشترکہ پریس کانفرنس میں کہا کہ حماس کی جنگ بندی کی خلاف ورزی پر سخت ردعمل دیں گے۔

وزیراعظم نیتن یاہو نے مزید کہا کہ اسرائیل کے حق دفاع کی حمایت کرنے پر امریکا کا شکریہ ادا کرتے ہیں اور مستقبل میں بھی دونوں ممالک مل کر کام کرتے رہیں گے۔

یہ خبر بھی پڑھیں : اسرائیل اور حماس گیارہ روز سے جاری جنگ بندی پر رضامند  

اس موقع پر امریکی وزیر خارجہ نے کہا کہ غزہ میں تباہ ہونے والے علاقوں کی ازسر نو مرمت کے لیے عالمی امداد فراہم کریں گے تاہم اس بات کی بھی یقین دہانی کراتے ہیں کہ اس امداد سے حماس کو کوئی تقویت نہیں ملے گی۔

یہ خبر پڑھیں : جنگ بندی کے باوجود مسجد اقصیٰ میں اسرائیلی پولیس کی نمازیوں پر شیلنگ 

واضح رہے کہ 14 دن کی جھڑپوں کے بعد اسرائیل اور حماس میں جنگ بندی پر اتفاق ہوگیا تھا تاہم اس دوران غزہ پر اسرائیلی بمباری میں 248 فلسطینی شہید ہوئے جن میں 66 بچے بھی شامل ہیں جب کہ حماس کے راکٹ حملوں میں دو بچوں سمیت 12 اسرائیلی ہلاک ہوئے تھے۔

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں