52

حکومتی دعوے بے بنیاد؛ رمضان سے قبل مہنگائی میں مزید اضافہ

 اسلام آباد: حکومت کے مہنگائی کنٹرول کرنے کے دعوے دھرے کے دھرے رہ گئے، رمضان سے قبل ملک میں مہنگائی کی شرح میں اضافہ کا رجحان جاری ہے، ایک ہفتے کے دوران مہنگائی کی شرح میں 0.60 فیصد اضافہ ہوگیا جس کے بعد مہنگائی کی شرح ہفتہ وار مہنگائی 18.43 فیصد تک پہنچ گئی۔

وفاقی ادارہ شماریات کی ہفتہ وار رپورٹ کے مطابق ملک میں 8 اپریل کو ختم ہونے والے ہفتے کے دوران مہنگائی 18.43 فیصد پر پہنچ گئی جبکہ گزشتہ ہفتے کے دوران ملک میں آلو، ٹماٹر چین اور سبزیوں سمیت 18 اشیائے ضروریہ کی قیمتوں میں اضافہ ہوا، چینی انڈے پیاز سمیت 13 اشیا کی قیمتوں میں کمی ہوئی جبکہ 20 اشیائے ضروریہ کی قیمتیں مستحکم رہیں۔

اعداد و شمار کے مطابق ایک ہفتے کے دوران مرغی 26 روپے 68 پیسے فی کلو، آلو 3 روپے 88 پیسے، ٹماٹر 3 روپے 33 پیسے، بڑا گوشت 2 روپے 51 پیسے اور چھوٹا گوشت 5 روپے 16 پیسے فی کلو مہنگا ہوا، کیلا فی درجن 4 روپے 98 پیسے، دال مونگ، گھی، تازہ دودھ اور دہی کی قیمت میں بھی اضافہ ہوا، ایک ہفتے میں 13 اشیا سستی جبکہ 20 کی قیمت میں استحکام رہا۔

حالیہ ہفتے کے دوران چینی اوسط 3 روپے 10 پیسے فی کلو سستی ہوئی، علاوہ ازیں ایل پی جی کا گھریلو سلنڈر 32 روپے 29 پیسے، آٹا کا 20 کلو کا تھیلا 6 روپے 70 پیسے سستا ہوا، لہسن، انڈے، دال ماش، دال چنا اور پیاز کی قیمتوں میں بھی کمی واقع ہوئی ہے۔

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں