15

موبائل فون وطن لانے والوں سے وصول شدہ اضافی رقم واپس دینے کا اعلان

آئندہ سے ایک پاسپورٹ پر پانچ کے بجائے صرف ایک موبائل فون رجسٹرڈ ہوسکے گا، ایف بی آر (فوٹو : فائل)

آئندہ سے ایک پاسپورٹ پر پانچ کے بجائے صرف ایک موبائل فون رجسٹرڈ ہوسکے گا، ایف بی آر (فوٹو : فائل)

 لاہور: ایف بی آر نے موبائل فونز پر عائد کسٹمز ڈیوٹی کے حوالے سے’’ایکسپریس‘‘ خبر پر باضابطہ وضاحت جاری کرتے ہوئے کہا ہے کہ وی بوک سسٹم میں تبدیلی کے دوران غلطی سے کسٹم ڈیوٹی میں اضافہ ہوا جس پر متاثرہ افراد سے معذرت خواہ ہیں انہیں اضافی رقم واپس کی جائے گی۔

ایف بی آر کی وضاحت میں کہا گیا ہے کہ پی ٹی اے کے ساتھ ہونے والی میٹنگ میں علم ہوا کہ غیر ملکی مسافر اپنے پاسپورٹ پر پانچ موبائل فونز رجسٹرڈ کر سکتے ہیں، 500 امریکی ڈالر سے زائد مالیت کے فون پر عائد کسٹمز ڈیوٹی و ٹیکسز ادائیگی کا پاسپورٹ اور شناختی کارڈ کے ذریعے رجسٹریشن میں فرق تقریبا” 9000 روپے ہے۔

یہ پڑھیں : موبائل فون کسٹم ڈیوٹی میں 5200 کا اضافہ تکنیکی غلطی کا نتیجہ

ایف بی آر کے مطابق اس فرق کو ختم کرنے اور پاسپورٹ کے ذریعے رجسٹریشن کے تحت صرف ایک فون کی اجازت کے لیے وی بوک موڈیول میں تبدیلی کی جارہی تھی۔ اس پراسیس کے دوران تکنیکی خرابی کی وجہ سے ود ہولڈنگ ٹیکس کی چھوٹ سسٹم سے خارج ہو گئی جس کی وجہ سے پاسپورٹ پر فون رجسٹریشن پر 36720 روپے کسٹمز ڈیوٹی چارج ہونے لگی۔

ایف بی آر نے کہا ہے کہ اس مسئلے کے فوری حل کی کوشش کی جارہی ہے اور تکنیکی ٹیم وی بوک موڈیول کو جانچ پڑتال کر رہی ہے اور عائد ڈیوٹیز اور ٹیکسز کی درستی کر رہی ہے، آج اس مسئلے کو ٹھیک کر لیا جائے گا، اس تکنیکی خرابی کی وجہ سے جن افراد سے زائد ڈیوٹیز و ٹیکسز لیے گئے ہیں انہیں زائد ادا شدہ رقم فی الفور ریفنڈ کر دی جائے گی۔

ایف بی آر اس خرابی  کی وجہ سے مسافروں کو پہنچنے والی مشکل پر معذرت خواہ ہے۔

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں